سری نگرکے لال چوک پر کشمیری نوجوانوں نے ترنگا لہرا کر فاروق عبداللہ کو پانی پانی کر دیا

سری نگر: کچھ محب وطن کشمیری نوجوانوں نے نیشنل کانفرنس کے صدر اور ریاست کے سابق وزیر اعلیٰ ڈاکٹر فاروق عبداللہ کو اس وقت شرم سے پانی پانی کر دیا جب حکومت ہند کو سری نگر کے لال چوک پر ترنگا لہرانے کے ان کے چیلنج کو چند روز بھی نہیں گذرے تھے کہ ان کشمیری نوجوانوں نے اسی لال چوک پر قومی ترنگا لہرا دیا۔
نومبر میں فاروق عبداللہ نے ،جنہیں ان کے ’پاک مقبوضہ کشمیر پاکستان کا ہے‘ جیسے ناپاک تبصرے پر زبردست ہدف تنقید بنایا گیا تھا، اس خطہ میں قومی پرچم لہرانے کے خیال کا مذاق اڑایا تھا۔اور کہاتھا کہ حکومت ہند پاک مقبوضہ کشمیر میں ایسی کوئی کوشش کرنے سے پہلے سری نگر کے لال چوک پر ہی ترنگا لہرا کر دکھا دے۔
لیکن فاروق عبداللہ کا ایک سخت پیغام دیتے ہوئے بدھ کی صبح وادی کے کچھ نوجوانوں نے لال چوک پہنچ کر ہند نواز نعرے لگائے اور وہاں قومی پرچم لہرایا۔
دریں اثنا بی جے پی ممبر اسمبلی رویندر رینا نے کہا کہ سری نگر کے قلب میں لہراتا قومی ترنگا تمام ملک مخالف لوگوں کی آنکھیں کھول دینے کے لیے کافی ہے۔انہوں نے اس اقدام کو فاروق عبداللہ جیسے غلیظ ذہنیت والے سیاستدانوں کے منھ پر زبردست تھپڑ سے تعبیر کیا۔

Title: patriots give it back to farooq abdullah hoist tricolor at srinagars lal chowk | In Category: کشمیر  ( kashmir )